Reminder

ریمائنڈر

السلام علیکم ناظرین! کیسے ہیں آپ؟

ناظرین! قربانی کے ایام گزر چکے ہیں۔ گھر گھر میں جانور کٹ چکا اور گوشت بٹ چکا۔ بقیہ فریزرز میں پہنچ چکا تاکہ سند ۔۔۔ سوری محفوظ رہے اور بوقت ضرورت کام آوے۔

ناظرین! شہر میں اس وقت ہر سو بار بی کیو پارٹیز کا دور دورہ ہے۔ قربانی کا گوشت مزے لے لے کے کھایا کھلایا جا رہا ہے۔ گلی گلی دھوئیں کے مرغولے ہیں اور گوشت کے بھننے کی اشتہا انگیز مہک۔ ہر سو انجوائمنٹ۔۔۔ تفریح۔۔۔ موج مستی۔۔۔ ہلہ گلہ ہے اور لطیفوں قہقہوں کی گونج ہے۔  اس موقع پر ہم نے کچھ شہریوں سے ان کے تاثرات جاننے کی کوشش کی ہے۔ آئیے آپ کو دکھاتے ہیں کہ اس وقت شہریوں کی کیا فیلنگز ہیں؟

سوال: ہاں بھئی کیا بنا رہے ہیں آپ؟

جواب: بہاری بوٹی۔۔۔

سیخ کباب۔۔۔

گولہ کباب۔۔۔

تکے۔۔۔

 سوال: کیا آپ نے اس سال قربانی کی؟

جواب: جی ہاں۔۔۔

جی الحمد للہ۔۔۔

جی اللہ کا شکر ہے ۔۔۔

جی ہر سال کرتے ہیں۔

سوال:کس جانور کی قربانی کی آپ نے؟

جواب: گائے۔۔۔

بکرا۔۔۔

اونٹ۔۔۔

دنبہ۔۔۔

بچھیا۔۔۔

سوال: اچھا یہ بتائیے آپ قربانی کیوں کرتے ہیں؟

جواب: جی اللہ کا حکم پورا کرنے کے لئے۔۔۔

جی سنت ابراہیمیؑ کی پیروی کے لئے۔۔۔

جی سنت ابراہیمیؑ کے اعادہ کے لئے۔۔۔

جی شریعت کا حکم ہے۔۔۔

سوال: اچھا قربانی کا کوئی فائدہ معلوم  ہے آپ کو؟

جواب: جی قربانی کے جانور کے خون کا قطرہ زمین پر گرنے سے پہلے گناہ معاف ہو جاتے ہیں۔۔۔

جی قربانی کے جانور کے جسم پر موجود ہر بال کے بدلے ایک نیکی۔۔۔

جی قربانی سے اللہ کا قرب حاصل ہوتا ہے۔۔۔

جی قربانی کی برکت سے غریب غرباء کو بھی گوشت کھانے کو مل جاتا ہے۔۔۔

سوال:تو  کیا آپ سمجھتے ہیں کہ قربانی کے بعد آپ کے گناہ معاف ہو گئے اور اللہ کا قرب حاصل ہو گیا؟

جواب: جی ان شاء اللہ۔۔۔۔

جی رب کی رحمت سے امید تو یہی ہے۔۔۔

جی یقیناً۔۔۔

جی ڈیفینٹلی۔۔۔

جی آف کورس۔۔۔

سوال: یہ بتائیے کہ یہ میوزک کیوں لگایا ہوا ہے؟

جواب: جی بس ایسے ہی۔۔۔۔

جی پارٹی ٹائم ہے۔۔۔

انجوائمنٹ کے لئے۔۔۔

تفریح کی غرض سے۔۔۔

ذرا رونق میلہ بھی تو نظر آئے۔۔۔

سوال: لیکن ابھی کل ہی تو آپ نے قربانی کی تھی ، اللہ کا قرب حاصل کرنے کے لئے۔۔۔ گناہوں کی معافی کے لئے۔۔۔۔ پھر یہ میوزک یہ گانا بجانا ۔۔۔؟

جواب: سناٹا۔۔۔

خاموشی۔۔۔

خجالت۔۔۔

(جی بدن کے ساتھ روح کو بھی تو غذا چاہئے (ایک منچلے کا جواب

ناظرین! آپ نے دیکھا کہ قربانی کے ایام گزر چکے۔ قربانی بھی ہو چکی اور شہریوں کواپنے تئیں اللہ کا قرب بھی حاصل ہو چکا۔ خلاص!  شہری اب اپنے روٹین پر واپس آ چکے ہیں۔ ساتھ ہی شادیوں کا سیزن بھی اسٹارٹ ہو چکا ہے۔۔۔ اور شادی کی تقریبات میں جو کچھ ہوتا ہے وہ ہم اور آپ جانتے ۔۔۔

ٹوں ٹوں۔۔۔  ٹوں ٹوں۔۔۔

 ناظرین! ابھی ابھی آسمانوں سے بریکنگ نیوز آئی ہے

لَن يَنَالَ اللَّـهَ لُحُومُهَا وَلَا دِمَاؤُهَا وَلَـٰكِن يَنَالُهُ التَّقْوَىٰ مِنكُمْ

(ترجمہ: اللہ تک نہ ان (جانوروں) کا گوشت پہنچتا ہے اور نہ خون، بلکہ اس تک تمہارا تقویٰ پہنچتا ہے۔ (سورۃ الحج۔ 37

کیمرہ مین کراماً  کاتبین کے ساتھ۔۔۔

ہدایت اللہ۔۔۔

ریمائنڈر نیوز۔۔۔

کراچی۔

 

Youm e Arafa

یوم عرفہ

یوم عرفہ

الیوم اکملت لکم دینکم ۔۔۔

دین کی تکمیل کا دن۔۔۔

و اتممت علیکم نعمتی ۔۔۔

بندوں پر نعمت کے اتمام کا دن۔۔۔

و رضیت لکم الاسلام دینا۔۔۔

اسلام کو بندوں کے لئے دین کی حیثیت سے پسند کئے جانے کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

خطبہ حجۃ الوداع کا دن

یوم عرفہ

خواب کی تعبیر کا دن۔۔۔

آرزو کی تکمیل کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

پراگندہ حالوں کا دن ۔۔۔

بکھرے بالوں کا دن ۔۔۔

سفید پوشوں کا دن ۔۔۔

عرق آلود نفوس کا دن ۔۔۔

غبار آلود ملبوس کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

حج کا دن ۔۔۔

وقوف عرفات کا دن ۔۔۔

  خانہ بدوشوں کی ماننداک میدان میں ڈیرہ جمانے کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

لبیک اللھم لبیک کی پکار کا دن۔۔۔

دعاؤں کی تکرار کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

تکبیر کا دن ۔۔۔

تہلیل کا دن ۔۔۔

تحمید کا دن ۔۔۔

تسبیح کا دن۔۔۔

درود و سلام کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

اعتراف جرم کا دن ۔۔۔

گناہوں پر ندامت کا دن ۔۔۔

سچی توبہ کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

بدن سے نکلتے پسینے کی دھاروں کا دن۔۔۔

آنکھوں سے بہتی آبشاروں کا دن ۔۔۔

یوم عرفہ

بلکنے کا دن ۔۔۔

گڑگڑانے کا دن ۔۔۔

یوم عرفہ

دلوں کے اضطراب کا دن۔۔۔

سسکیوں اور مناجات کا دن۔۔۔

کپکپاتے لبوں پر مچلتی التجاؤں کا دن۔۔۔

دل کی گہرائیوں سے نکلی آہوں کا دن ۔۔۔

رحمت الٰہی کی متلاشی نگاہوں کا دن۔۔۔

بخشش کے حصول کے لئے پھیلائے گئے ہاتھوں کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

شیطان کی ذلت و رسوائی کا دن ۔۔۔

شیطان کی محنت کی بربادی کا دن ۔۔۔

شیطان کا اپنے سر میں خاک ڈالنے کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

باری تعالیٰ کے آسمان دنیا پر نزول فرمانے کا دن ۔۔۔

فرشتوں کے سامنے بندوں پر فخر فرمانے کا دن ۔۔۔

فرشتوں کو گواہ بنا کر بندوں کو معاف کرنے کا دن ۔۔۔

یوم عرفہ

بندوں پر انعام و اکرام کا دن۔۔۔

مغفرت کا دن ۔۔۔

بخشش کا دن ۔۔۔

جہنم سے نجات کا دن ۔۔۔

باغیوں کے لئے عام معافی کے اعلان کا دن ۔۔۔

یوم عرفہ

گناہوں سے پاک صاف ہو جانے کا دن۔۔۔

از سر نو پیدائش کا دن۔۔۔

ایک نئے جنم کے آغاز کا دن ۔۔۔

آئندہ کے لئے گناہوں سے بچنے کے عزم کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

حج مبرور کی صورت میں

جنت کنفرم ہو جانے کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

رب کو منانے کا دن ۔۔۔

رب کے مان جانے کا دن۔۔۔

یوم عرفہ

پیچھے رہ جانے والوں کے لئے۔۔۔

حسرت و یاس کا دن۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔